ایک دن سائنس کے بغیر

سائنس اور تحقیق کے فائدے

image

آپ صبح نیند سے بیدار ہوتے ہیں.. مگر آپ کبھی وقت نہیں جان سکیں گے کیونکہ تمام میکینکل گھڑیاں اور وہ بھی جو بیٹری یا بجلی سے چلتی ہیں سائنسی بنیادوں پر استوار کی گئی ہیں جس سے وہ چلتی ہیں.. چنانچہ سارا دن وقت آپ کے لیے ایک پہلی ہی بنا رہے گا.

اپنے بستر سے اٹھتے ہیں.. اگر کھڑکی بند ہے تو آپ گھپ اندھیرے میں ہوں گے کیونکہ بجلی کے بلب ایک سائنسی اختراع ہیں جنہیں تھامس ایڈیسن نے ایجاد کیا تھا..

image

پیٹرول، ڈیزل یا مٹی کے تیل سے کسی قسم کے فانوس کے استعمال کے بارے میں سوچھیں بھی مت کیونکہ ایندھن کی یہ اقسام علمی تحقیق کا نتیجہ ہیں..

پھر کیا؟ کیا آپ اپنے دانت برش کرنا چاہتے ہیں؟ کیا آپ بھول گئے ہیں کہ ٹوٹھ پیسٹ ایسے بہت سارے کیمیائی عناصر کا مرکب ہے جنہیں اگر سائنسدان دریافت نہ کرتے تو ہم ان کے بارے میں سوچ بھی نہیں سکتے تھے؟ آپ کو صرف پانی سے اپنے دانت صاف کرنے ہوں گے..

قضائے حاجت کے لیے بھی آپ کو کسی درخت یا جھاڑیوں کی آڑ لینی ہوگی کیونکہ آپ کے غسل خانے میں موجود ہر چیز علمی تحقیق کا نتیجہ ہے.

ہم امید کرتے ہیں کہ آپ کی نظر اچھی ہوگی اور آپ کو نظر کی عینک کی ضرورت نہیں ہوگی بصورتِ دیگر آپ کو اس سے بھی محروم رہنا پڑے گا کیونکہ نظر کی عینک ہمیں علمِ بصریات نے بخشی ہے..

image

اب کیا آپ کو ناشتہ کرنا ہے؟ تو پھر لکڑیوں کا انتظام کیجیے کیونکہ گیس اور بجلی وہ مصیبتیں ہیں جو ہمیں پاگل سائنسدانوں نے دی ہیں..

ناشتہ کے بعد آپ کام پر جانے کا فیصلہ کرتے ہیں… کس چیز پر سفر کرنا پسند فرمائیں گے؟ گدھا، گھوڑا یا خچر؟ آپ کو یاد دلانے کی ضرورت نہیں کہ سفر کے تمام ذرائع بشمول گاڑیاں، بسیں، جہاز، میٹرو وغیرہ علمی ترقی کا شاخسانہ ہیں جنہیں انجینئر نامی ناہنجار قسم کے لوگوں نے ایجاد کیا ہے.

آپ کام پر پہنچ گئے ہیں؟ یاد رہے کہ کوئی فون، موبائل، فیکس، کمپیوٹر، ٹائپ رائٹر، کیلکولیٹر وغیرہ نہیں ہے.. اپنے کام کی نوعیت کے حساب سے کیا آپ خطوط ارسال کرنے کے لیے کبوتر کا استعمال کریں گے؟

image

اگر موسم گرم ہوا تو آپ کو سارا دن پسینہ میں شرابور ہونا پڑے گا، کیونکہ کوئی پنکھا یا اے سی نہیں ہے، نتیجتاً سارا دن پسینہ میں شرابور رہنے پر شام کو آپ کے جسم سے ایسی بو آرہی ہوگی کہ الامان الحفیظ..

سارا دن کام کر کے آپ شام کو گھر لوٹتے ہیں.. آپ آرام کرنا چاہتے ہیں اور ساتھ ہی کچھ تفریح بھی.. ٹی وی، ریڈیو، ویڈیو اور ڈی وی ڈی کو بھول جائیں… تو پھر آپ کے لیے کیا بچا؟ اگر آپ شادی شدہ ہیں تو آپ کے لیے تفریح کا صرف ایک ہی ذریعہ موجود ہوگا جسے انسان ابتدائے آفرنیش سے جانتا آیا ہے…

یقیناً حمل کو روکنے کے لیے ایسی کوئی دواء نہیں ہوگی جسے آپ یا آپ کی بیوی استعمال کر سکے کیونکہ یہ ادویات طویل طبی تحقیق کے بعد ہم تک پہنچی ہیں.. چنانچہ آپ کی فیملی میں ہر سال ایک فرد کا اضافہ ہوتا چلا جائے گا.
مبارک ہو

یہ بتانے کی تو قطعی ضرورت نہیں کہ اس ایک دن کے دوران آپ کو لگنے والی کسی قسم کی چوٹ یا بیماری کے خطرناک نتائج برآمد ہوسکتے ہیں کیونکہ نا تو دوائیں ہیں اور نا ہی ہسپتال ہیں.

image

اس سب کے بعد کیا آپ کا اب بھی یہی خیال ہے کہ ہمیں سائنس یا سائنسی تحقیق کی ضرورت نہیں؟
فیصلہ آپ پر ہے.

یہ تحریر مکی کا بلاگ سے لی گئی ہے

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s